|Gilgit Urdu News|myGilgit.com|

اکتوبر 20, 2008

محکمہ ایجوکیشن کافرائض سے غفلت برتنے والے اساتذہ کےخلاف کارروائی کافیصلہ

Filed under: Gilgit Urdu News — mygilgit @ 4:37 صبح
Tags: , ,

گلگت (کے ٹواخبار) ڈپٹی ڈائریکٹر ایجوکیشن ضلع گلگت کنورحمیداختر نے حراموش جوٹیال پرائمری سکول میںٹیچرز کی عدم حاضری پرسخت نوٹس لیتے ہوئے ڈی ڈی اوحراموش سکولز دولت میرکوحکم دیاہے کہ آئندہ 3دن کے اندر اندر مذکورہ سکول کے تمام اساتذہ کی حاضری یقینی بنائی جائے ورنہ ان کی تنخواہ بند کی جائے ڈی ڈی اوایجوکیشن نے اپنے دفتر میں حراموش کے عمائدین محمدعالم، شکورجان، حسین علی، حسینعلی، جاویدحسین، محمد عالم ، حسن عباس اورعابد حسین سے گفتگوکرتے ہوئے کہاکہ پورے ضلع گلگت میں علم کی روشنی کوپھیلانے کےلئے محکمہ تعلیم کام کررہاہے ایسے میں اساتذہ کی غفلت کوکبھی بھی برداشت نہیں کیاجائے گا انہوںنے حراموش کے عمائدین کویقین دلایاکہ ان کے جائز مطالبات پورے کئے جائیں گے اورپرائمری سکول جوٹیال کے اساتذہ فوراً ڈیوٹی پرحاضر ہوںگے ورنہ ان کے خلاف کارروائی کی جائے گی اس موقع پر کمیونٹی کے نمائندوںنے ڈی ڈی ایجوکیشن کنورحمیداخترکے علم دوست اقدامات کی تعریف کرتے ہوئے ان سے ہرممکن تعاون کرنے کی یقین دہانی کرائی بعدازاں کمیونٹی کے نمائندوں نے کے پی این سے گفتگوکرتے ہوئے کہاکہ سیاسی لوگ سفارش اوراثرورسوخ استعمال کرکے تعلیمی نظام کودرہم برہم کرنے کی کوشش کررہے ہیں اگرانہوںنے اپنی علم دشمن پالیسیوں کوترک نہیں کیاتوان کے خلاف سخت مزاحمت کریںگے انہوںنے کہاکہ آج کے بعد جوبھی ٹیچر غیرحاضر ہوگا اس کی براہ راست شکایت ڈی ڈی اوحراموش اورڈپٹی ڈائریکٹر ایجوکیشن سے کرینگے ۔

Leave a Comment »

ابھی تک کوئی تبصرہ نہیں.

RSS feed for comments on this post. TrackBack URI

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s

Create a free website or blog at WordPress.com.

%d bloggers like this: