|Gilgit Urdu News|myGilgit.com|

نومبر 29, 2008

دیامر اورکوہستان کے دس افراد اغواءکرلئے گئے ، راولپنڈی میں احتجاجی مظاہرہ

Filed under: Gilgit News,Gilgit Urdu News — mygilgit @ 10:01 صبح
Tags: ,

کے ٹواخبار) مسلم لیگ ن دیامر کے صدر حاجی عبدالوحید، جے یو آئی کے ڈپٹی سیکرٹری جنرل حاجی گلبر خان، مسلم لیگ ن کے نائب صدر غندل شاہ اور ضلع کوہستان کے سیاسی رہنما اسد اللہ قریشی کی قیادت میں سینکڑوں افراد نے پریس کلب راولپنڈی کے سامنے مظاہرہ کیا۔ مظاہرین نے پلے کارڈ اٹھا رکھے تھے جن پر اغوا شدگان کی بازیابی کے نعرے درج تھے مظاہرین کی قیادت کرنے والے رہنما ﺅں نے کہا کہ26تاریخ کی رات کو راولپنڈی کے مختلف ہوٹلوں سے نا معلوم افراد نے چھاپہ مار کر اسلحہ کے زور پر10افراد کو اغوا کیا ان میں تھور چلاس سے تعلق رکھنے والے مجیب الرحمٰن ولد رحمت خان بلے سند تھک چلاس کے بشیر احمد کوہستان سے تعلق رکھنے والا عبدالقدیر ولد عبدالوہاب سمیت10شامل ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ یہ بے گناہ لوگ ہیں جو کاروبار کی غرض سے راولپنڈی آئے ہوئے تھے انہوں نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ مارڈرن ہوٹل، انٹر پاک ہوٹل، راجہ ہوٹل اور حبیب ہوٹل پر مختلف گاڑیوں میں سوار متعدد افراد نے چھاپہ مارا اور وہاں سے ہوٹل انتظامیہ کے تعاون سے دس افراد کو حراست میں لے لیا جو یہاں پر تجارت، علاج اور حج پر جانے کیلئے آئے ہوئے تھے۔ احتجاجی مظاہرہ سے خطاب کرتے ہوئے رہنماﺅں نے کہا کہ یہ واقعہ پولیس کی جانب سے بھتہ خوری کا نتیجہ ہے اور اکثر منشیات کا مقدمہ درج کر کے رقم کی وصولی کا مطالبہ کیا جا تا ہے۔ مذکورہ بالا افراد نے کہا کہ وزیر اعلیٰ پنجاب اس غنڈہ گردی کا فوری نوٹس لیں اور راولپنڈی اسلام آباد میں کاروبار کرنے والے دیامر کوہستان کے رہائشی افراد کو تحفظ فراہم کریں۔ دریں اثناءراولپنڈی میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے پیپلز سٹوڈنٹس فیڈریشن راولپنڈی ڈویژن کے صدر بابو استوری سینئر نائب صدر شاہد استوری، قراقرم سٹوڈنٹس آرگنائزیشن راولپنڈی ڈویژن کے صدر ذوالفقار علی نے کہا کہ گزشتہ رات نامعلوم مسلح افراد نے راولپنڈی کے مختلف ہوٹلوں سے چلاس اور کوہشتان سے تعلق رکھنے والے کاروبار اور دیگر مسائل کے غرض سے آئے ہوئے10افراد کو اغوا کیا۔ پولیس کے مختلف سٹیشنوں میں پتہ کیا تو لا علمی کا اظہار کر رہے ہیں انہوں نے کہا بے گناہ افراد کو اغوا کر کے پر امن ماحول کو خراب کرنے کی سازش ہو رہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اگر 24گھنٹے کے اندر اندر انہیں بازیاب نہیں کرایا گیا تو شاہراہ قراقرم کو مکمل طور پر بند کیا جائے گا اور احتجاجی مظاہرے کی کال دیں گے انہوں نے کہا کہ حکومت اس معاملے کو سنجید گی سے حل کرے اس کے علاوہ طلبہ اغوا شدہ افراد کی رہائی کیلئے پارلیمنٹ ہاﺅس کے سامنے مظاہرہ کریں گے۔ مظاہرے میں شامل افراد نے ہاتھوں میں پلے کارڑ اٹھا رکھے تھے جن پر اغوا شدگان کی بازیابی کے مطالبات درج تھ۔ انہوں نے شدید نعرہ بازی بھی کی۔

Leave a Comment »

ابھی تک کوئی تبصرہ نہیں.

RSS feed for comments on this post. TrackBack URI

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s

Create a free website or blog at WordPress.com.

%d bloggers like this: