|Gilgit Urdu News|myGilgit.com|

ستمبر 2, 2009

قراقرم یونیورسٹی میں شینازبان کے فروغ کیلئے ریسرچ کاآغاز

Filed under: Gilgit News — mygilgit @ 4:16 شام

گلگت(کے ٹو) قراقرم انٹرنیشنل یونیورسٹی میںشینا زبان کے فروغ کیلئے ریسرچ کاباقاعدہ آغاز ہوگیاہے اس کیلئے سمر انسٹیٹیوٹ آف لینگوسٹک اور کے آئی یو کے درمیان باہمی معاہدے پردستخط ہوگئے شینازبان پر باقاعدہ ریسرچ کیلئے کے آئی یو اورسمر انسٹیٹیوٹ آف لینگوسٹک کے اشتراک سے 5روزہ ورکشاپ کو باقاعدہ آغاز ہوگیا جس کاعنوان ”دی لینگوسٹک اینڈ سوشیالوجیکٹ“ بینرآف آرتھوگرافی“ ہے افتتاحی تقریب مشرف ہال کے آئی یو میںمنعقد ہوئی جس کی مہمان خصوصی وائس چانسلر کے آئی یو ڈاکٹرنجمہ نجم تھیں خطبہ استقبالیہ پیش کرتے ہوئے انگلش ڈیپارٹمنٹ چیئرمین ضیاءاللہ حق انور نے ورکشاپ کے اغراض ومقاصد بیان کرتے ہوئے کہاکہ کے آئی یو کے اندر شینازبان سمیت دیگر مقامی زبانوں کے فروغ کے لئے ایک پلیٹ فارم مہیا کیاگیاہے انہوںنے مزید کہاکہ بہت جلد قراقرم یونیورسٹی کے اندر ملٹی لینگوسٹک ریسرچ سنٹرقائم کیاجائے گا سمرانسٹیٹیوٹ آف لینگوسٹک کی سربراہ کارلہ ایف ریڈلوف نے ورکشاپ کے شرکاءکو شینازبان اوردیگر مقامی زبانوںکی اہمیت اورافادیت کے بارے میںتفصیل سے روشنی ڈالی وائس چانسلر کے آئی یو ڈاکٹرنجمہ نجم نے اپنے خطاب میںکہاکہ جب میںپہلی مرتبہ گلگت پہنچی تھی تو شینازبان سن کر ہی یہ فیصلہ کیاتھا کہ یونیورسٹی میںاس زبان کی ترقی کےلئے کام کرناچاہیے مجھے اس بات کاعلم نہیںتھا کہ شینازبان پرکتابیں بھی لکھی جاچکی ہیں مجھے یہ سن کرخوشی ہوئی ہے کہ شینازبان پر کتابیںلکھی جاچکی ہیں انہوںنے مزید کہاکہ زبان صرف زبان نہیں ہوتی ہے بلکہ زبان ثقافت اورروایات کی اصل پہچان ہوتی ہے انہوںنے کہاکہ ہماری کوشش ہے کہ کے آئی یو میں زبانوں کی ترقی کیلئے ورکشاپوں کازیادہ سے زیادہ انعقاد کریں انہوںنے طلباءوطالبات سے مطالبہ کیاہے کہ وہ اپنی زبان سے محبت کرے اور زبان کی ترقی کےلئے جدوجہد کرے

2 تبصرے »

  1. We have a great concern over Gilgit and Baltistgan here in kashmir (Srinagar) as this is the part of our state, the United Jammu and Kashmir, a special report on the autonomy to G&B is comming in our weekly paper Pukaar, watch it here on Friday log on to http://www.weeklypukaar.com
    Sahil Maqbool
    Editor Pukaar Srinagar kashmir

    تبصرہ از Sahil M Maqbool — ستمبر 2, 2009 @ 4:34 شام | جواب دیں

  2. Mr.Maqbool
    Gilgit and Baltistan are not part of kashmir, how you can say we have dirrerent culture,different language and different living standred.so please close your concern about gilgit and baltistan which are now separate setup and we dont want to be a part of Kashmir.

    تبصرہ از Younus from Bahrain — اکتوبر 12, 2009 @ 3:00 شام | جواب دیں


RSS feed for comments on this post. TrackBack URI

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s

Create a free website or blog at WordPress.com.

%d bloggers like this: